سسپنس کے شوقین حضرات یہ لازمی دیکھیں

اگر آپ سسپنس ڈرامہ کے شوقین ہیں، رومانس پسند ہے، سوشل سوسایٹی کی نفسیات اور رویوں کے ادراک اور ان میں بہتری لانے میں دلچسپی رکھتے ہیں تو تیرہ اقساط پر مشتمل نیٹ فلِکس کا یہ ٹی وی سیریل آپ کو ضرور دیکھنا چاہئے.
کہانی امریکن ہائی سکول کی ایک لڑکی کی موت کے گرد گھومتی ہے. جو خودکشی سے قبل چند آڈیو کیسیٹ میں اپنی خود کشی کے ١٣ اسباب ریکارڈ کرکے اپنے سکول کے انہی دوستوں کے سننے کے لئے چھوڑ جاتی ہے جو کسی نہ کسی طرح ان ١٣ اسباب کا حصہ تھے، مگر جنہیں اپنی کسی غلطی کا گمان تک نہیں تھا. چند ہفتوں میں جب باری باری وہ آڈیو ریکارڈنگز اُن سٹوڈنٹس تک پہنچتی ہیں تو وہ سبھی ان اسباب پر اپنی شخصیت کے مطابق ری ایکٹ کرنا شروع کر دیتے ہیں اور انکی زندگیاں پہلے سی نہیں رہتیں.

اس سیریز کی ڈائریکشن بیحد اعلی ہے. ماضی کے فلیش بیکس اور موجودہ وقت کے مناظر کا کمبینیشن بہت عمدہ ہے. بہت زبردست انداز میں ماضی کے مناظر میں لے جایا جاتا ہے اور پھر وہاں سے واپس موجودہ وقت کے سین میں آتے ہیں تو ناظر ہدایتکارکی سوچ اور کیمرہ ورک کو داد دیے بغیر نہیں رہ پاتا.

ہمارے لئے مشرق میں بیٹھ کر مغربی معاشرے پر تنقید کرنا بیحد آسان ہے لیکن اس سیریز کی سب سے اچھی بات یہ لگی کہ مغربی سوسایٹی میں معاشرتی و اخلاقی سطح پرجو پیچیدگیاں اور تحفظات جنم لے رہے ہیں وہ لوگ ان پر بات کرتے ہیں، ان پرمتاثر کن ڈرامہ اور فلم بنا کر سوسایٹی کو سوچنے اور اپنی حالت بہتر بنانے کی جانب راغب کرنے کی کوشش کرتے ہیں. ہمیں بھی مشرق میں اس ٹرینڈ کو فالو کرنے کی ضرورت ہے.

اس سیریل کے کرداروں کو بھی دلچسپ انداز میں اپنی روٹین کی اُن غلطیوں کے ادراک کا موقع ملتا ہے. جنہیں عام زندگی میں معاشرتی حقیقت سمجھ کراگنورکردیا جاتا ہے. سوسائٹی کا ہر کردار مکمل طور پر منفی نہیں ہوتا، اکثروہ کہیں کہیں، تھوڑا تھوڑا غلط ہوتا ہے. مگر کبھی کبھی وہ سب “تھوڑے تھوڑے غلط ” مل کر کسی ایک کردار کی نفسیات اور زندگی برباد کرنے کا سبب بن رہے ہوتے ہیں.
-خرّم امتیاز

اپنا تبصرہ بھیجیں